اخلاقیات | مظفر حنفی

وہ دونوں فوارے کے کارنس پر بیٹھے بڑی دیر سے اخلاقیات پر بحث کر رہے تھے۔ ’’دیکھئے نا! کیا زمانہ آ گیا ہے۔ شارع عام پر اس قسم کے مجسمے نصب کرنا کہاں کی تہذیب ہے‘‘۔
’’اجی صاحب، کیا عرض کرو۔ ابھی کل ہی۔۔ ارے۔۔‘‘
اور وہ دونوں سامنے سے گزرتی ہوئی برہنہ پگلی کو ٹکٹکی لگا کر دیکھنے لگے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com