دہلی یونیورسٹی کی طالبہ مودی پر برس پڑیں

لاہور(ویب ڈیسک): دہلی یونیورسٹی کی بہادرطالبہ کول پریت نے فاشسٹ مودی کی ناکام معاشی اور کشمیر پالیسیوں کا پردہ چاک کردیا.میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ بھارتی میڈیا بالکل سچ نہیں دکھا رہا لیکن ایک دن سچ سامنے آئیگا. ان کا کہنا تھا کہ مودی کے دباؤ میں بھارتی میڈیا مسئلہ کشمیرکو نہیں دکھا رہا اور نہ ہی یہ دکھارہا کہ بھارت کس طرح معاشی بدحالی کا شکارہے . انہوں نے کہا کہ آج بھارت میں لوگوں کے پاس پارلے بسکٹ خریدنے کے لیے بھی پیسے نہیں ہیں اور ٹیکسٹائل انڈسٹری سے کروڑوں لوگوں کو نوکری سے نکالا جارہاہے.
ان کا مزید کہنا تھا کہ مودی کب تک آرٹیکل 370 ، بالاکوٹ اورمسئلہ کشمیر کے پیچھے چھپے گا. ایک نہ ایک دن تو سچ سامنے آئیگا اور میڈیا لوگوں کو کھائیگا کہ بھارتی معیشت کس قدربری حالت میں ہے. مودی کے امریکہ میں جلسے کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ بھارتی میڈیا نے اس جلسے کو لیکر بہت شورمچایا کہ مودی کی بیرون ملک رہنے والے بھارتیوں میں بہت مقبولیت ہے لیکن یہ نہیں دکھایا کہ اسی گراؤنڈ کے باہر دس ہزارلوگ مودی کیخلاف نعرے بازی کررہے تھے اورکہہ رہے تھے کہ بھارت نے جو کشمیرمیں کیا وہ غلط ہے . یہاں سوال کرنیوالوں کو کالے قانون کے ذریعے جیلوں‌میں بند کیا جارہا ہے. ایک نہ ایک دن کرفیوہٹے گا اور کشمیری باہرآئیں گے اس دن کیا ہوگا. تاریخ بتاتی ہے کہ سچ کو زیادہ دیرتک نہیں چھپایا جاسکتا.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com